I often think of holding my mobile phone in my hand at night /میں اکثر رات کو جب تھک ہار کر اپنے بستر پر لیٹتا ہوں تو موبائل ہاتھ میں لیے سوچتا ہوں

I often think of holding my mobile phone in my hand at night /میں اکثر رات کو جب تھک ہار کر اپنے بستر پر لیٹتا ہوں تو موبائل ہاتھ میں لیے سوچتا ہوں


میں اکثر رات کو جب تھک ہار کر اپنے بستر پر لیٹتا ہوں تو موبائل ہاتھ میں 

لیےمیںسوچتا ہوں

 کبھی اس وقت تمھارے انگنت مسیج سے میرے موبائل کی سکرین بھری ہوتی تھی. کہیں پر پھول بھیجے ہوتے تھے تو کہیں پر غصے کا اظہار کرتے ہوئے ایموجی. اور مسینجر کو کھولتے ہی میرا پہلا مسیج سوری  کیا کرتا تھا. اور تھوڑی بہت ناراضگی کے بعد تم مان جایا کرتی تھی. میں اب بھی تمھارے بھیجے ہوئے مسیج پڑھتا ہوں. جن میں  تم نے محبت کے ہزاروں دعوے کر رکھے تھے. میں اب بھی تمھاری تصویروں کو دیکھتا ہوں جو مجھ سے ناراض نہیں ہوتی. میں اب بھی تمھارے وائس مسیج سُنتا ہوں وہ چہکتی اور کھلھلاتی ہوئی آواز جن میں تم میری سانس سے بھی زیادہ قریب تر ہوتی تھی میں اب بھی تیری یادوں کو بچوں کی طرح اپنے سنیے سے لگائے بیٹھا ہوں. تمھارے پاس ہوتے کبھی سوچا نا تھا تم ایسے مجھ سے روٹھ جاؤ گی. اور پھر آنکھوں سے بہتی ندیوں کو صاف کرتا ہوں.سچ پوچھو تو میری زندگی میں خوشیاں تو جیسے روٹھ گئی ہوں . ساری رات کانٹوں کے بستر پر یہی سوچتے حساب کرتے گزر جاتی. تم جہاں بھی ہو جس حال میں بھی ہو اللہ خوش رکھے تمھاری ہر وہ مجبوری کو پورا 
کرے جس کی وجہ سے تمھیں میری محبت کی قربانی دینا پڑی


I often think of holding my mobile phone in my hand at night when I am tired and lying on my bed.

At that time, the screen of my mobile phone was full of your innumerable messages. Somewhere flowers were sent, somewhere emoji expressing anger. And as soon as I opened Messenger, my first message was sorry. And after a little resentment you used to agree. I still read the message you sent. In which you made thousands of claims of love. I still look at your pictures that don't bother me. I still hear your voice message, the chirping and hoarse voice in which you were closer than my breath, I still hold your memories in my ears like a child. I never thought you would be so angry with me. And then I clean the rivers flowing with my eyes. Truth be told, the joys in my life are gone. The whole night was spent thinking on the bed of thorns. Wherever you are and whatever situation you may be in, may Allah be pleased with you.
I often think of holding my mobile phone in my hand at night /میں اکثر رات کو جب تھک ہار کر اپنے بستر پر لیٹتا ہوں تو موبائل ہاتھ میں لیے سوچتا ہوں



Post a Comment

4 Comments

Please do not any vulgar or bad comment.Give respects to others and take respects.love to humanity.